ہیڈلائنز


عمران طاہر سے بھارتی تماشائی کی بدتمیزی، نازیبا کلمات کسے

Written by | روزنامہ بشارت

جوہانسبرگ : جنوبی افریقہ کے اسپینر عمران طاہر کو بھارتی شخص نے نازیبا جملے کستے ہوئے ہراساں کرنے کی کوشش کی جس پر سیکیورٹی پر مامور افراد نے مداخلت کرتے ہوئے بھارتی شخص کو اسٹیڈیم سے باہر نکال دیا.

تفصیلات کے مطابق ورلڈ کلاس اسپینر عمران طاہر کو بھارتی جنونیت اور نسل پرستانہ سوچ کا سامنا کا نشانہ چوتھے ون ڈے میچ میں اس وقت کرنا پڑا جب ایک بھارتی تماشائی نے اُن پر نازیبا جملے کسے اور ہنگامہ آرائی کرنے کی کوشش کی گئی.

پاکستانی نژاد جنوبی افریقی کھلاڑی عمران طاہر نے سیکویرٹی اہلکاروں کو صورت حال کی نزاکت سے آگاہ کیا جس پر دو سیکیورٹی اہلکاروں نے مداخلت کرتے ہوئے بھارتی تماشائی کو اسٹیڈیم سے باہر بھیج دیا اور کھیل دوبارہ سے شروع کیا گیا.

جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ نے افسوسناک واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ کھیل کے دوران عدم برداشت کے رویے اور کھلاڑیوں کو تضحیک کا نشانہ بنانے کی اجازت نہیں دی جائے گی.

بورڈ کے ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ یہ تاثر غلط ہے کہ عمران طاہر نے مذکورہ شخص یا کسی بھی بچے سے کوئی بدتمیزی کی ہے، کرکٹ جنوبی افریقہ اور اسٹیڈیم کی سیکیورٹی ٹیم معاملے کی تحقیقات کررہی ہے.

جنوبی افریقی ٹیم کے منیجر محمد موسیٰ جی نے کہا کہ اسٹیڈیم میں موجود ایک شخص پورے میچ کے دوران عمران طاہر پر جملے کستا رہا ہے جس انہوں نے سیکویرٹی اہلکاروں کو آگاہ کیا تھا.

خیال رہے کہ آئی سی سی کے قوانین کے تحت نسل پرستانہ جملے کسی طور قانل قبول نہیں ہیں اور ایسا کرنے والوں کو میدان سے باہر نکال دیا جاتا ہے اور مزید تحقیقات کے بعد تاحیات اسٹیڈیم میں داخلے پر پابندی عائد کی جا سکتی ہے.

واضح رہے کہ عمران طاہر اس میچ میں بطور 12 ویں کھلاڑی کی حیثیت سے میدان میں موجود تھے اور کھلاڑیوں کو مطلوبہ چیزیں فراہم کر رہے تھے.

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ