ہیڈلائنز


پیپلز پارٹی نے گلگت بلتستان کو آئینی حقوق دینے کا مسئلہ انتخابی منشور میں گول کردیا

Written by | روزنامہ بشارت

اسلام آباد: پاکستان پیپلز پارٹی نے گلگت بلتستان کو آئینی حقوق دینے کا مسئلہ انتخابی منشور میں گول کردیا۔ جمعرات کے روز پی پی پی کے مرکزی رہنماؤں قمرالزمان کائرہ، زمرد خان و دیگر نے انتخابی منشور کا اعلان کیا جس میں گلگت بلتستان کا سب سے اہم مسئلہ اور یہاں کے عوام کا دیرینہ مطالبہ آئینی صوبے کا کوئی ذکر نہیں ہے۔ 15 نکاتی منشور آئینی حقوق دینے بارے مکمل طور پر خاموش ہے، منشور میں پرانی باتوں کو دھرا کر عوام کی ھمدردی حاصل کرنے کی کوشش کی گئی ہے، سیاسی تجزیہ نگاروں کے مطابق پی پی پی منشور میں آئینی حقوق کے مسئلے پر خاموشی سے عوامی ہمدردی میں کمی کا پارٹی کو سامنا ہو سکتا ہے، پاکستان پیپلزپارٹی وفاق اور گلگت بلتستان میں پانچ سال تک اقتدار میں رہی ہے لیکن آئینی حقوق دینے میں ناکام رہی ہے، قانون ساز اسمبلی گلگت بلتستان نے آئینی صوبے کی قرارداد منظور کی تھی جس پر عمل درآمد وفاقی سرکار نے نہیں کیا، گلگت بلتستان آزادی سے لیکر آج تک بنیادی آئینی حقوق سے محروم ہے آج تک کوئی جماعت اس خطے کو ملکی آئین کا حصہ بنانے میں کامیاب نہیں ہو سکی، مسئلہ کشمیر کی وجہ سے گلگت بلتستان قربانی کا بکرا بنا ہوا ہے۔

Clear

11°C

اسلام آباد

Clear
Humidity: 54%
Wind: NNE at 11.27 km/h
Tuesday 7°C / 12°C Partly cloudy
Wednesday 6°C / 15°C Sunny
Thursday 7°C / 15°C Sunny
Friday 10°C / 16°C Sunny
Saturday 8°C / 15°C Partly cloudy
Sunday 9°C / 13°C Mostly cloudy
Monday 7°C / 13°C Partly cloudy

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ