ہیڈلائنز


اربوں روپے کا کالا دھن دبئی منتقل کرنے والے 700 پاکستانیوں کا سراغ لگا لیا گیا

Written by | روزنامہ بشارت

اسلام آباد: فیڈرل بورڈ آف ریونیوکے ماتحت ادارے ڈائریکٹوریٹ جنرل انٹیلی جنس اینڈ انوسٹی گیشن ان لینڈ ریونیو نے اربوں روپے کا کالا دھن دبئی منتقل کرنے کیلیے دبئی کے ریئل اسٹیٹ گروپ ’’دماک پراپرٹیز‘‘سے رابطہ کرنے والے 700 پاکستانیوں کا سراغ لگالیا۔ میڈیا کو دستیاب دستاویز کے مطابق ڈائریکٹوریٹ جنرل انٹیلی جنس اینڈانویسٹی گیشن نے اپنی رپورٹ میں انکشاف کیاہے کہ پاکستانیوں کی جانب سے دبئی بھجوایا جانے والا کالادھن سوئس بینکوں میں موجود پاکستانیوں کے کالے دھن سے10 گنا زیادہ ہے اور دبئی اس وقت پاکستان سے کالا دھن بھجوانے کاسب سے بڑا حب بنا ہواہے۔ رپورٹ میں بتایا گیاہے کہ دماک پراپرٹیز کاشمار یو اے ای کے پراپرٹی کے شعبے میں بڑے گروپ کے طور پر ہوتا ہے،اس گروپ کاچیئرمین حسین سجوانی یو اے ای کا شہری ہے،2005 میں دماک گروپ نے پاکستان میں رجسٹریشن حاصل کی اور یہ ایف بی آر کے پاس این ٹی این نمبر 2274651-0 کے تحت بطور نان ریذیڈنٹ ٹیکس دہندہ رجسٹرڈ ہے تاہم گروپ کی طرف سے ایف بی آر کے پاس انکم ٹیکس گوشوارے جمع نہیں کروائے جارہے جو انکم ٹیکس آرڈیننس 2001 کے سیکشن 114(1)(VII)کی خلاف ورزی ہے۔


گزشتہ ماہ کراچی کے مقامی ہوٹل میں لگنے والی نمائش کے معائنہ کے موقع پرڈی جی آئی اینڈآئی ان لینڈریونیو کی ٹیم نے وہاں موجود’’دماک پراپرٹیزکوایل ایل سی‘‘کے ڈائریکٹرسیلز ثمرالحدادسے ملاقات کی اور جب ان سے پوچھا گیا کہ فروری2014میں ڈی جی آئی اینڈآئی ان لینڈریونیو کے خط پر تحریری یقین دہانی کے باوجودپاکستانی سرمایہ کاروں کی تفصیلات کیوں فراہم نہیں کی گئیں تووہ کوئی تسلی بخش جواب نہ دے سکے۔اس کے علاوہ جب ان سے یہ پوچھاگیاکہ پاکستانیوں کی جانب سے دبئی میں خریدی اوربک کروائی جانے والی پراپرٹی کیلیے اربوں روپے کی ادائیگیاں بیرون ملک کیسے منتقل کی جاتی ہیں اوریہ کہ جو رقوم بیرون ملک منتقل کی گئی ہیں کیاانھیں چیک کیا گیا کہ وہ قانونی تھیں یا کالا دھن تھا تو دماک کے ڈائریکٹر اس کا بھی کوئی تسلی بخش جواب نہ دے سکے جس پرڈی جی آئی اینڈ آئی ان لینڈ ریوینیو نے کالادھن دبئی منتقل کرنے والے پاکستانیوں کا سراغ لگانے کیلیے’’آپریشن ڈیزرٹ‘‘ کے نام سے کارروائی کرنے کا فیصلہ کیا جو انتہائی کامیاب رہا اور اس دوران کالادھن دبئی منتقل کرنیوالے 700 پاکستانیوں کا سراغ لگایا گیا جن میں سے بہت سے لوگ فرنٹ مین کا کردار ادا کر رہے ہیں جبکہ ان کے پیچھے کچھ بڑے لوگ ہیں۔


ڈی جی آئی اینڈ آئی کی رپورٹ میں سفارش کی گئی ہے کہ اسٹیٹ بینک کوبینکنگ چینلز کے ذریعے فنڈزکی منتقلی پر مزید شرائط عائد کرنی چاہیے اور یہ کہ ایف آئی اے کو حوالہ اورہنڈی سسٹم کے ذریعے رقوم کی منتقلی کیخلاف کریک ڈاؤن کرنا چاہیے۔ ڈی جی آئی اینڈ آئی کی سفارشات پر حکومت گلف ممالک میں ریئل اسٹیٹ میں سرمایہ کاری کے نام پر سرمائے کی پاکستان سے منتقلی روکنے کیلیے سنجیدہ اقدامات اٹھانے پرغورکررہی ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ منی لانڈرنگ کے اس کیس کی تفصیلات وزیرداخلہ چوہدری نثار کو بھجوانے کی تجویزدی گئی ہے تاکہ اس دھندے میں ملوث لوگوں کیخلاف کارروائی کیلیے تحقیقاتی ایجنسیوں کے حکام پر مبنی خصوصی ٹیم تشکیل دی جاسکے تاہم بااثر حلقوں کی جانب سے یہ کیس سردخانے کی نذر کرنے کیلیے ایف بی آر پردباؤ ڈالا جارہا ہے۔

Sunny

31°C

اسلام آباد

Sunny
Humidity: 43%
Wind: WNW at 17.70 km/h
Thursday 23°C / 30°C Scattered thunderstorms
Friday 22°C / 30°C Sunny
Saturday 22°C / 30°C Sunny
Sunday 23°C / 30°C Sunny
Monday 24°C / 31°C Sunny
Tuesday 27°C / 31°C Scattered thunderstorms
Wednesday 26°C / 30°C Scattered thunderstorms

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ