ہیڈلائنز


جے آئی ٹی رپورٹ پر ردعمل ،عمران نامہ ، مسترد کرتے ہیں

Written by | روزنامہ بشارت

اسلام آباد : مسلم لیگ (ن) کے وفاقی وزراء نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے پاناما کیس پر تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کی رپورٹ کو ردی قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا ہے اور جے آئی ٹی کی رپورٹ کو پی ٹی آئی رپورٹ سے منسوب کیا۔

وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقیات احسن اقبال، وزیراعظم کے معاون خصوصی بیرسٹر ظفر اللہ، وفاقی وزیر دفاع خواجہ آصف اور وفاقی وزیر پیٹرولیم شاہد خاقان عباسی نے مشترکہ پریس کانفرنس میں جے آئی ٹی رپورٹ پر ردعمل دے رہے تھے جن کا کہنا تھا کہ پاناما جےآئی ٹی رپورٹ میں کوئی نئی بات نہیں ہے اور نہ ہی کوئی ٹھوس شواہد پیش کیے اور نہ اس میں مستند حقائق موجود ہیں اس لیے اس رپورٹ کو مسترد کرتے ہیں۔

جے آئی ٹی عمران نامہ ہے، احسن اقبال 


پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے احسن اقبال نے کہا کہ جےآئی ٹی رپورٹ میں وہ الزامات لگائے گئے ہیں وہ عمران خان عرصہ دراز سے لگاتے آ رہے ہیں اور آج انہی سیاسی مخالفین کے الزامات کو رپورٹ کی شکل میں عدالت میں پیش کیا گیا اوروہ حوالے پیش کیے گئے جن کی قانون میں جگہ نہیں چنانچہ جےآئی ٹی کی رپورٹ کو مسترد کرتے ہیں۔

احسن اقبال نے جےآئی ٹی کی رپورٹ کوعمران نامہ قراردیتے ہوئے کہا کہ رپورٹ میں الزامات اور تنقید کوپیش کیا گیا ہے تاہم اچھا ہوتا اگر وزیراعظم کے خلاف مالی بدعنوانی کا ثبوت دیا جاتا سب جانتے ہیں کہ تمام الزامات خاندان کے نجی کاروبارسے متعلق لگائے گئے جب کہ وزیراعظم نوازشریف نجی کاروبارسے الگ ہوچکےتھے۔

جے آئی ٹی رپورٹ نہیں، یہ پی ٹی آئی رپورٹ ہے، بیرسٹر ظفر اللہ 


وزیراعظم نواز شریف کے معاون خصوصی بیرسٹر ظفر اللہ خان نے جے آئی ٹی رپورٹ پر بات کرتے ہوئے اراکین جے آئی ٹی پر اعتراضات اُٹھا دیئے اور جانبداری کو چیلنج کردیا انہوں نے کہا کہ جےآئی ٹی میں 4 افراد ایسے تھے جن کا قانون سے تعلق صفرتھا

بیرسٹرظفراللہ نے کہا کہ ہماراخیال تھا کہ جےآئی ٹی فیئرنس اورانصاف کے تقاضوں کے تحت رپورٹ دے گی تاہم آج پتہ چلا کہ سپریم کورٹ میں جےآئی ٹی نہیں بلکہ پی ٹی آئی کی رپورٹ پیش کی گئی ہے۔

جے آئی ٹی کے نام پر قانونی نہیں سیاسی جنگ ہو رہی ہے، خواجہ آصف 


وفاقی وزیر دفاع خواجہ آصف نے کہا کہ جے آئی ٹی رپورٹ میں زیادہ تر رحمان ملک کی باتوں پرانحصارکیا گیا ہے جب سب جانتے ہیں کہ رحمان ملک کا نام ہی کافی ہے اور اس سے زیادہ کیا بات کروں۔

انہوں نے کہا کہ الانہ اورہلٹرن حسین نوازکی ملکیت ہی نہیں ہیں لیکن وہ ان کے کھاتے میں ڈال دی گئی ہیں جب کہ حسین نوازکی سعودی عرب میں کمپنیوں کےمنافع سے پیسہ پاکستان آیا جو بینکنگ چینل سے پیسہ نکلا اور بینکنگ چینل سے ہی آیا۔

خواجہ آصف نے کہا کہ حسین نواز برطانیہ میں رہتے ہیں اور وہاں کا قانون یہاں سے زیادہ سخت ہے لیکن جہاں سے پیسہ آرہا ہے وہاں توکوئی قانون حرکت میں نہیں آیا اس لیے یہ بات سچ ثابت ہوجاتی ہے کہ پاکستان میں سیاسی جنگ ہورہی ہے قانون کی نہیں۔

انہوں نے اعلان کیا کہ جے آئی ٹی رپورٹ پرعدالت عظمیٰ میں بھرپورقانونی جنگ لڑیں گے اورایک ایک کر کے ہرالزام کو مسمارکردیں گے ملک میں جمہوریت کے خلاف کسی سازش کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

جے آئی ٹی رپورٹ میں اکثر باتیں مضحکہ خیز ہیں، شاہد خاقان عباسی 

وفاقی وزیر پیٹرولیم شاہدخاقان عباسی نے بھی پریس کانفرنس سے خطاب کیا اور جے آئی ٹی کے رویے اور طریقہ کار پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ رپورٹ میں ایسی باتیں ہیں جومضحکہ خیزہیں کیوں کہ حسن اورحسین نواز جو پاکستان میں کاروبارنہیں کرتے اور اپنے والد کوبینکنگ چینل سے رقم بھیجی جس کا ریکارڈ موجود ہے۔

انہوں نے جے آئی ٹی پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ رپورٹ غیرمتوقع نہیں جےآئی ٹی سےایسی ہی رپورٹ کی توقع تھی اس رپورٹ کےذریعےشکوک پیداکرنےکی کوشش کی جیسےبڑاجرم ہوگیا ہے اس لیے ہم اپنا مقدمہ پاکستان کےعوام کے سامنے رکھنا چاہتے ہیں تاکہ عوام خود فیصلہ کرلیں

Mostly sunny

20°C

اسلام آباد

Mostly sunny
Humidity: 41%
Wind: W at 6.44 km/h
Sunday 11°C / 20°C Mostly sunny
Monday 11°C / 20°C Sunny
Tuesday 13°C / 18°C Partly cloudy
Wednesday 11°C / 20°C Sunny
Thursday 10°C / 20°C Sunny
Friday 11°C / 17°C Sunny
Saturday 12°C / 17°C Sunny

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ