ہیڈلائنز


آزاد کشمیر میں قانون سازاسمبلی کے ارکان کے چناؤ کیلئے ووٹنگ

Written by | روزنامہ بشارت

مظفرآباد: آزاد جموں وکشمیر کی قانون ساز اسمبلی کے ارکان کے انتخاب کے لیے ووٹنگ کا عمل جاری ہے۔ جنت نظیر وادی آذاد کشمیر میں قانون ساز اسمبلی کے اراکین کے چناؤ کے لئے پولنگ صبح 8 بجے شروع ہوا جو بغیر کسی وقفے کے شام 5 بجے تک جاری رہے گا تاہم پولنگ اسٹیشنوں میں موجود ووٹرز کو مقررہ وقت کے بعد بھی ووٹ ڈالنے کی اجازت ہوگی۔ آزاد کشمیر کی 49 نشستوں میں سے 41 پر امیدواروں کا چناؤ براہ راست ہو گا جب کہ 8 نشستوں پر امیدواروں کا چناؤ منتخب اراکین اسمبلی کریں گے۔ گوجرانوالہ ، سیالکوٹ اور آزاد کشمیر میں اکا دکا مقامات پر ہاتھا پائی اور تلخ کلامی کے معمولی واقعات بھی رونما ہوئے ہیں تاہم پولنگ کا عمل معمول کے مطابق جاری ہے۔ انتخابات کے لئے 37 ہزار 500 سیکیورٹی اہلکار تعینات کئے گئے ہیں، ہر پولنگ اسٹیشن کے اندر ایک فوجی اہلکار بھی تعینات ہو گا جسے مجسٹریٹ کے اختیارات دیئے گئے ہیں۔ حساس پولنگ اسٹیشنز پر 6 پولنگ سیکیورٹی اہلکار تعینات کئے گئے ہیں جبکہ نارمل پولنگ اسٹیشنز پر 4 اہلکار تعینات ہیں جن میں پاک فوج کا ایک جوان بھی شامل ہے۔ اس کے علاوہ ایمرجنسی کے لئے اضافی دستے اور کوئیک رسپانس فورس بھی الرٹ پر ہے، کوئیک رسپانس فورس کو ہیلی کاپٹر بھی سہولت بھی فراہم کی گئی ہے۔ آزاد کشمیر کے انتخابات کے لئے 5429 پولنگ اسٹیشنز اور 8048 پولنگ بوتھ قائم کئے گئے ہیں جب کہ الیکشن کمیشن کا مرکزی کنٹرول روم مظفر آباد قائم کیا گیا ہے۔ انتخابات میں پیپلز پارٹی نے کسی بھی جماعت کے ساتھ انتخابی اتحاد نہیں کیا تاہم بعض حلقوں میں جماعت اسلامی اور (ن) لیگ جب کہ بعض مقامات پر پی ٹی آئی اور مسلم کانفرنس نے اتحاد کیا ہے۔ انتخابات میں 324 امیداور آزاد کشمیر سے اور 99 امیدوار مہاجرین میں سےانتخاب لڑ رہے ہیں، یوں آج 49 نشستوں کے لیے 26 سیاسی جماعتوں کے 423 امیداور میدان میں ہوں گے۔ انتخابات میں آزادکشمیر اور پاکستان سے 26 لاکھ 74 ہزار 586 ووٹر حق رائے دہی استعمال کریں گے جن میں 11 لاکھ  90 ہزار 839 خواتین بھی شامل ہیں۔ آزادکشمیر کے دارالحکومت  مظفرآباد کی قانون ساز اسمبلی میں 6، میرپور کی 4، رقبے کے لحاظ سے سب سے بڑے ضلع نیلم کی ایک سیٹ جب کہ  ضلع باغ کی اسمبلی میں 4 نشستیں ہیں۔ آزاد کشمیر کی اسمبلی 49 اراکین پر مشتمل ہوتی ہے۔ ان نشتوں کی تقسیم کچھ یوں ہے کہ پہلی 29 نشستوں پر آزاد کشمیر کے 26 لاکھ 74 ہزار 584 ووٹرز اپنے نمائندے منتخب کرتے ہیں جب کہ 12 نشستوں پر پاکستان میں موجود 4 لاکھ 38 ہزار 884 کشمیری مہاجرین حق رائے دہی استعمال کرتے ہیں۔ 8 نمائندے مخصوص نشستوں سے آتے ہیں جن میں 5 خواتین، ایک عالم دین، ایک اوورسیز پاکستانی اور ایک ٹیکنوکریٹ کی نشست ہوتی ہے۔ وزیراعظم اس پارٹی یا اتحاد کا بنے گا جس کے پاس سادہ اکثریت یعنی کم از کم 25 سیٹیں ہوں گی۔ واضح رہے کہ  29 امیدواروں کا انتخاب عوام آزاد کشمیر میں ہی کریں گے جب کہ 12 کا انتخاب پاکستان میں موجود کشمیری کریں گے۔

Clear

26°C

اسلام آباد

Clear
Humidity: 77%
Wind: E at 11.27 km/h
Sunday 23°C / 29°C Thunderstorms
Monday 22°C / 28°C Thunderstorms
Tuesday 23°C / 28°C Thunderstorms
Wednesday 23°C / 28°C Thunderstorms
Thursday 22°C / 26°C Thunderstorms
Friday 21°C / 26°C Thunderstorms
Saturday 22°C / 28°C Thunderstorms

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ