ہیڈلائنز


انڈین فلم انڈسٹری کا سرمناک کارنامہ

Written by | روزنامہ بشارت

معروف اداکارہ “تبو” نے بالی ووڈ کے تقریباً ہر ایک ہیرؤ کے ساتھ کام کیا ہے لیکن انہوں نے آج تک لیجنڈری اداکار جیکی شروف کے ساتھ کسی فلم میں کام نہیں کیا جس کی وجہ ان کے ساتھ بچپن میں پیش آنے والا افسوسناک واقعہ بتایا جاتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اداکارہ تبو کی بڑی بہن فرح ناز بھی 80 اور 90 کی دہائیوں میں صف اول کی اداکارہ شمار ہوتی تھیں ۔ تبو کو بچپن سےہی فلموں میں آنے کا شوق تھا اور اسی وجہ سے وہ اکثر اپنی بڑی بہن کے ساتھ مختلف فلموں کی شوٹنگ پر چلی جاتی تھیں ۔ 1985 میں بھی وہ اپنی بہن کے ہمراہ ایک فلم کی شوٹنگ دیکھنے کیلئے موریشس گئیں جہاں فرح ناز اور جیکی شروف فلم میں کام کر رہے تھے۔ فلم کی شوٹنگ کے دوران فرح ناز نے الزام عائد کیا کہ جیکی شروف نے ان کی چھوٹی بہن تبو کو جنسی طور پر ہراساں کیا ہے۔

یہ الزام سامنے آنے کے بعد جیکی شروف پر اسرار طور پر غائب ہوگئے جبکہ فرح ناز کی طرف سے بھی اس معاملے کو زیادہ نہیں اٹھایا گیا اور نہ ہی پولیس میں اس قسم کی رپورٹ درج کرائی گئی تھی۔ بعض فلمی حلقوں کا کہنا ہے کہ جب یہ واقعہ پیش آیا تو تبو کی عمر صرف 14 سال تھی اور اسی واقعہ کی وجہ سے تبو نے کبھی بھی جیکی شروف کے ہمراہ کسی فلم میں کام نہیں کیا، واضح رہے کہ تبو اور جیکی شروف نے 1998 میں بننے والی فلم ’ دو ہزار ایک‘ میں اکٹھے اداکاری تو کی تھی لیکن اس فلم میں دونوں نے ایک دوسرے کے مد مقابل آنے سے گریز ہی کیا تھا۔ اگر ان دونوں اداکاروں کے حوالے سے انٹرنیٹ پر سرچ کیا جائے تو بھی ان کی اکٹھی تصویریں اکا دکا ہی ملتی ہیں جو کسی نہ کسی تقریب کی ہیں لیکن دیگر اداکاروں کی طرح تبو اور جیکی شروف کی باقاعدہ اکٹھی تصاویر نہیں ملتیں

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ