ہیڈلائنز


آئندہ فلموں میں کن فنکاروں کو ترجیح دوں گی

Written by | روزنامہ بشارت

 نئی دہلی میں ہونے والی ایک تقریب میں بھارتی ہدایتکارہ اور کوریوگرافر فرح خان نے پاکستانی فنکاروں پر پابندی کے حوالے سے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ’ہمارے اپنے ملک میں بہت زیادہ ٹیلنٹ ہے اور ہمیں اپنے لوگوں کے ساتھ ہی کام کرنا چاہیے‘۔ فرح خان کا مزید کہنا تھا کہ ’میرے خیال سے اب اگر یہ کہا جارہا ہے کہ ہمیں اُن کے ساتھ کام نہیں کرنا چاہیے تو میں یہ کہوں گی کہ ہمارے ملک میں بہت زیادہ ٹیلنٹ موجود ہے اور ہمیں اپنے ملک کے لوگوں کے ساتھ کام کرنا چاہیے‘۔ پاکستانی فنکاروں کے حوالے سے فرح کا مزید کہنا تھا کہ ’اُن کے پاس ایسا کیا ہے جو ہمارے پاس نہیں، میرا خیال ہے کہ ہم ان سے بہتر ہیں لہٰذا ہم اپنے لوگوں کے ساتھ کام کریں گے‘۔ فرح خان نے واضح طور پر کہا کہ ’میں تو اپنی فلم میں اپنے ملک سے تعلق رکھنے والے فنکار کو ہی لینے کو ترجیح دوں گی‘۔ بولی ووڈ ڈائریکٹر کرن جوہر اور اداکار شاہ رخ خان کے حمایت کرتے ہوئے فرح خان نے کہا کہ پابندی کا اطلاق ان فلموں پر نہیں ہونا چاہیے تو مکمل ہوچکی ہیں اور ریلیز ہونے والی ہیں۔ فرح خان نے کہا کہ ’میرا خیال ہے کہ ہم یہاں چند لوگوں کی بات کررہے ہیں بلکہ چند لوگ بھی نہیں بلکہ صرف دو فنکاروں کی بات ہے جو موجودہ حالات میں زیادہ اہمیت نہیں رکھتے‘۔ انہوں نے کہا کہ ’جب ان فنکاروں نے بھارتی فلموں میں کام کیا تو اس وقت انڈین فلموں میں پاکستانی فنکاروں کا کام کرنا غیر قانونی نہیں تھا اور فلموں کی تیاری میں کافی پیسہ اور محنت صرف ہوتی ہے لہٰذا میرا خیال ہے کہ فلموں پر پابندی لگانا جائز نہیں ہوگا‘۔ واضح رہے کہ پاکستان اور ہندوستان کے درمیان حالیہ کشیدگی کا اثر پاک بھارت شوبز پر بھی پڑا ہے اور ہندوستان میں پاکستانی فنکاروں کو دھمکیاں اور ملک چھوڑنے کے الٹی میٹم دیے جارہے ہیں۔ اُڑی حملے میں 18 ہندوستانی فوجیوں کی ہلاکتوں کے بعد ہندوستان اور پاکستان کے درمیان حالات کشیدہ صورتحال اختیار کرگئے ہیں، جس کے بعد انڈین فلم ایسوسی ایشن نے ہندوستان میں پاکستانی اداکاروں پر کام نہ کرنے کی پابندی عائد کردی۔ اس پابندی کے خلاف کئی بولی وڈ اداکاروں نے آواز اٹھائی جن میں سلمان خان، اوم پوری اور کرن جوہر شامل ہیں۔ واضح رہے کہ مہاراشٹرا نونرمن سنہا (ایم این ایس) نے پاکستانی اداکاروں کو ہندوستان چھوڑنے کی دھمکی دی تھی جس کے بعد انہوں نے کرن جوہر کے گھر کے باہر بھی دھرنا دیا، جس کی وجہ ان کی فلم ’اے دل ہے مشکل‘ ہے۔ فلم ’اے دل ہے مشکل‘ میں کرن جوہر نے پاکستان کے کامیاب اداکار فواد خان کو کاسٹ کیا ہے اور یہی وجہ ہے کہ کرن جوہر کو دھمکیاں موصول ہورہی ہیں۔ کرن جوہر کی فلم ’اے دل ہے مشکل‘ رواں سال 28 اکتوبر کو سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی جس میں رنبیر کپور، ایشوریا رائے بچن، انوشکا شرما اور فواد خان موجود ہیں۔ دوسری جانب پاکستان میں بھی کئی سینما گھروں نے بولی وڈ فلموں کی نمائش پر پابندی عائد کردی ہے، جبکہ پیمرا نے بھی ٹی وی چینلز پر ہندوستانی مواد پیش کرنے پر پابندی عائد کرنے کے حوالے سے اقدامات شروع کردیئے ہیں

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ