ہیڈلائنز


کیا قوم اپنے حقیقی خیرخواہ کے ساتھ ڈٹ کے کھڑی رہیگی یا.....؟

Written by | روزنامہ بشارت

اسلام آباد: جب تمام چور اچکے ایک بندے کےخلاف اکٹھے ہو جائیں اسکا استہزا کریں اسے بلیک میل کرنے کیلئے ہر حربہ استعمال کریں یہاں تک کہ اسکی بڑے پیمانے پہ کردار کشی کریں ایسے شخص پہ اندھا اعتماد کرو”پاکستانی تاریخ میں 4 بار ایسا ہوا کہ جب تمام شیطان ایک شخصیت کے خلاف اکٹھے ہوے.
__1قائد اعظم کے خلاف کانگریس.نام نہاد خدائےخدمتگار اور مختلف قسم کے مولوی. اکٹھے ہوے الزامات تہمتیں گالیاں اور فتوے.مگر قوم ان کے ساتھ کھڑی ہوگئ اور قائد کے مخالفین کو شکست فاش ہوئی.__2محترمہ فاطمہ جناح صاحبہ ایوب خان کے خلاف اٹھ کھڑی ہوئیں تو وہی سابقہ تمام کردار ایوب کی قیادت میں مادر ملت کے خلاف اکٹھے ہوگئے. خرم دستگیر کے جو وفاقی وزیر ہیں کے والد نے گجرانوالہ میں ایک جلوس نکالا جلوس کے آگے آگے ایک کتیا کو چلایا گیا جسکے گلے میں ایک کاعذ بندھا تھا جس پہ فاطمہ جناح لکھا تھا.__3ذوالفقار علی بھٹو ایک عظیم لیڈر تھے جب انہوں نے امراء کے ہاتھوں غصب شدہ حقوق غریب مزدور کسان اور ہاری کو دینے چاہے تو تمام لٹیرے سیاستدان اور مولوی انکے خلاف اٹھ کھڑے ہوے. اور ان کے خلاف ایک مشترکہ محاذ بنا لیا.__4چوتھی شخصیت ہیں عمران خان 21 سالوں سے کرپٹ مافیا کے خلاف جدوجہد کر رہے ہیں .تمام کا تمام مافیا انکے خلاف ایکا کئے کھڑا ہے. ن لیگ اے این پی، زردار ٹولہ، فضل الرحمان، ایم کیو ایم اچکزئ اور محترمہ جماعت اسلامی. کبھی انہی بھیک منگا اور زکوات خور کہا جاتا ہے .کبھی بندر اور گدھے سے تشبیح دی جاتی ہے کبھی انکے فلاحی اداروں شوکت خانم ہاسپٹلز اور نمل یونیورسٹی کے خلاف کاروائی کی دھمکیاں دی جاتی ہیں کبھی خریدنے کیلئے 10 ارب روپے کی آفر کی جاتی ہے.کبھی جھوٹے کیس بنائے جاتے ہیں تو کبھی گلا لئ جیسے بکاو کرداروں ان سے انکی منظم کردار کشی کی جاتی ہے .آفریں سے اس پیکر عظم و ہمت پہ جو چٹان کی طرح ڈٹ کے کھڑا ہے.مگر کیا قوم بھی اپنے حقیقی خیرخواہ کے ساتھ ڈٹ کے کھڑی رہیگی یا محترمہ فاطمہ جناح اور ذولفقار علی بھٹو کی طرح عمران خان کو بھی کھو دے گی.؟

تازہ ترین خبریں

کالم / بلاگ